چینی کرپشن رپورٹ کے بعد بھی حکومت ناکام رہی،
سینیٹر شیری رحمان ٹویٹ

0
5

اسلام آباد: سینیٹر شیری رحمان ٹویٹ کرتے ہوئے لکھا ہے کہ ‏ورلڈ بینک کی نئی رپورٹ کے مطابق پاکستان کی جی ڈی پی شرح نمو صرف 1.3 فیصد ہوگی جو جنوبی ایشیا میں سب سے کم ترین ہے۔

 خدشہ ہے کہ پبلک ڈیٹ جی ڈی پی کا 94 فیصد تک ہو جائے گا اور افراط زر کی شرح 9 فیصد سے زیادہ ہوگی۔
2020 میں مزید 20 لاکھ افراد غربت کی لکیر سے نیچے آگئے ہیں۔

 ‏پی ٹی آئی حکومت میں چینی اسکینڈلز نے قومی خزانے کو 110 ارب روپے کا نقصان پہنچایا ہے۔ اکثر ملیں پی ٹی آئی کے کرونیز کی ہیں جنہوں نے منافعہ کمانے کے لئے چینی کی قیمتوں میں اضافہ کیا۔ آج چینی کی قیمت 100 روپے فی کلو گرام تک پہنچ گئی ہے اور چینی کرپشن رپورٹ کے بعد بھی حکومت ناکام رہی ہے۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں